منقبت:شہِ دیں کے اشارہ پر فدا صدیق اکبر ہیں

نتیجۂ فکر: شمس الحق علیمی شمسی، مہراج گنج

شہِ دیں کے اشارہ پر فدا صدیق اکبر ہیں
تبھی تو باغ جنت میں سدا صدیق اکبر ہیں

ہدایت کے لئے روشن دیا صدیق اکبر ہیں
کیا حق نے جنہیں سب کچھ عطا صدیق اکبر ہیں

نبی کے عشق کی دولت بسائے اپنے سینے میں
جو کرتے ہر گھڑی حمد و ثنا صدیق اکبر ہیں

‏‎سفر ہو یا حضر ہو یا شبِ ہجرت بتا مجھ کو
رسولِ ہاشمی سے کب جدا صدیق اکبر ہیں

‏‎جہنم میں جلیں سب رافضی ہے ہم سے کیا مطلب
ہمارے واسطے تو رہنما صدیق اکبر ہیں

جواں میں سب سے پہلے آپ پر ایمان جو لائے
وہی تو یار غارِ مصطفیٰ صدیق اکبر ہیں

شفاعت حشر میں ہوگی نہیں تم دیکھنا اُن کی
اے شمسی جن سے دنیا میں خفا صدیق اکبر ہیں

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانبدارانہ نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

نعت رسول: طائرِ مدینہ تو! لے کے دردِ دل جاتا

مرشدی تاج الشریعہ علیہ الرحمہ کے ایک مصرع پر طبع آزمائی کی کوشش نتیجۂ فکر: …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے