تفسیر جلالین کو پڑھنے کا طریقہ

ازقلم: ابو المتبسِّم ایاز احمد عطاری، پاکستان

درس نظامی کے نصاب میں ایک تفسیر کی کتاب بنام ” تفسیر جلالین” شامل ہے۔ اس تفسیر کو پڑھنے کے بعد طالب علم اس قابل ہو جاتا ہے کہ اس کو قرآن پاک کے کلمات کے معنی مرادی سمجھ آجاتے ہیں۔ اور اس کو کچھ کلمات کی تحقیق کا علم حاصل ہوجاتا ہے۔

دونوں مفسِّرین کرام رحمھما اللہ نے ان امور کا لحاظ کیا ہے۔

1:- کبھی الفاظ کا لغوی معنی
2:- کبھی ترکیب نحوی
3:- کبھی مرادی معنی
4:- کبھی صیغہ کی تعلیل
5:- کبھی اعتراض کا جواب
6:- کبھی شانِ نزول
7:- کبھی مختف قراءتیں
وغیرہ وغیرہ بیان کریں گیں۔

تفسیر جلالین کو ایک پڑھنے کا طریقہ یہ ہے کہ سب سے پہلے مشکل لفظوں کے معانی کاپی پہ نوٹ کریں اور ان کو زبانی یاد کریں۔ پھر اغراض مفسّر زبانی یاد کر لیں۔ اب اس کے بعد کسی طالب علم کے ساتھ بیٹھ کر پڑھتے جائیں اور اغراض کی تعیین کرتے جائیں کہ یہاں پہ مفسر کی کونسی غرض مراد ہے۔

اس طرح تیاری کرکے درجے میں استاذ صاحب کے سامنے بیان کریں۔ پھر اس وقت نوٹ کریں کہ میں نے کہاں غلطی کی ہے۔ جہاں پہ غلطی ہو تو وہاں پہ استاذ محترم سے مئودبانہ عرض کریں کہ

یا سیدی میں نے اس کو یہاں پہ یہ بنایا تھا اور آپ نے کچھ اور۔ تو اس بارے میں رہنمائ فرما دیں۔ تو اسطرح کچھ دنوں کے بعد آپ کیلئے اغراض مفسر کی تعیین کرنا مشکل نہیں رہے گا۔ بشرط اچھے انداز اور ہر دن تیاری کریں۔

تفسیر جلالین کے ساتھ کم از کم ان 3 کتب کا مطالعہ کریں:

1:- حاشیہ صاوی
2:- حاشیہ کمالین
3

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانبدارانہ نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

تعلیم سے ہی بدلے گی قوم کی تصویر

تحریر: محمد ہاشم اعظمی مصباحینوادہ مبارکپور اعظم گڑھ یو پی 9839171719 انسان کو دیگر مخلوقات …

One comment

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے