ہریانہ کے سات اضلاع میں انٹرنیٹ خدمات پر تین فروری تک پابندی میں توسیع، حکومت امن چاہتی ہے یا کسان تحریک کو کچلنا!

ہماری آواز/چنڈی گڑھ، 02 فروری (پریس ریلیز) ہریانہ حکومت نے کسان تحریک کے دوران کسی گڑبڑی، افواہ اورغلط تشہیر کی پابندی کے پیش نظر کیتھل، پانی پت، جیند، روہتک، چرخی دادری، سونی پت، جھجّر میں وائس کال کو چھوڑ کر انٹرنیٹ اور ایس ایم ایس خدمات پر پابندی کی مدت تین فروری شام پانچ بجے تک کے لیے توسیع کر دی ہے۔

اس سلسلے میں ایک سرکاری ترجمان نے بتایا کہ یہ حکم علاقے میں امن قائم رکھنے، عوامی انتظام میں کسی بھی طرح کی گڑبڑی روکنے، ایس ایم ایس، واٹس ایپ، فیس بک، ٹویٹر وغیرہ مختلف سوشل میڈیا کے ذریعے سے غلط تشہیر اور افواہوں کی تشہیر روکنے کے لیے جاری کیے گئے ہیں۔
حکومت نے ان احکامات کی خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف سخت کاروائی کرنے کی وارننگ دی ہے اور تمام ٹیلی کام کمپنیاں اس حکم پر عمل درآمد کو یقینی بنانے کی ہدایات دی ہیں۔

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں نعیم الدین فیضی برکاتی

محمد نعیم الدین فیضی برکاتی ہماری آواز کے اعزازی ایڈیٹر اور سینیئر صحافی ہیں۔ موصوف ایم۔پی۔ کے ضلع کٹنی میں واقع دارالعلوم برکات غریب نواز کے پرنسپل اور ایک اچھے قلم کار ہیں۔ رابطہ نمبر: 09792642810 (ادارہ)

یہ بھی پڑھیں

عام آدمی پارٹی کا یوم جمہوریہ کے موقع پر ٹریکٹر پریڈ میں شامل ہونے کا اعلان

ہماری آواز/چندی گڑھ ، 19 جنوری (پریس ریلیز) عام آدمی پارٹی کی پنجاب یونٹ نے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے