نعت رسول: تیرے دربار سے ہوکر ترا نوکر آئے

نتیجۂ فکر: محمد نثار نظامی، مہراج گنج

کاش ایسا بھی کوئی لمحہ میسر آئے
تیرے دربار سے ہوکر ترا نوکر آئے

باوضو ہوکے میں اس وقت تری نعت پڑھوں
"جب تصور میں ترے شہر کا منظر آئے”

مل گئی مفلسوں لاچاروں یتیموں کو اماں
جس گھڑی دہر میں کونین کے سرور آئے

گرگیے نجد کے ایوان کے علمی جھومر
لے کے جب کلک رضا ہاتھ میں اختر آئے

جس کو بھی چاہیے جنت کی ہواؤں کی مہک
وہ مدینہ کے گلی کوچوں سے ہوکر آئے

اے نظامی تمہیں آقا نے بلایا ہے چلو
کاش یہ لے کے خبر کوئی کبوتر آئے

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانبدارانہ نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

نعت : جب مدینے سے عطا خیرات ہو تو نعت ہو

رشحات خامہ : محمد نثار نظامی مہراج گنج۔ صاحب جودو سخا کی بات ہو تو …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے