زرعی قوانین کی ہر دفعات پر حکومت مذاکرات کے ذریعہ شبہات دورکرنے کے لئے تیار : سیتارمن

ہماری آواز/نئی دہلی ، یکم فروری (پریس ریلیز) مرکزی وزیر خزانہ نرملا سیتارمن نے پیر کو کہا کہ زرعی اصلاحات کے قوانین کے سلسلے میں جاری تعطل کا واحد حل ‘بحث’ ہے اور حکومت تینوں قوانین کی ہر دفعات پر کسانوں سے مشاورت کے لئے تیار ہے۔
محترمہ سیتارمن نے پارلیمنٹ میں بجٹ پیش کرنے کے بعد نیشنل میڈیا سنٹر میں منعقدہ پریس کانفرنس میں ایک سوال کے جواب میں کہا کہ "حکومت کسی بھی نقطہ اور زرعی قوانین کے بارے میں بات کرنے کے لئے تیار ہے جس پر کسانوں کو شبہ ہے۔”
انہوں نے کہا کہ وزیر زراعت نریندر سنگھ تومر اور حکومت کے دیگر وزراء بھی تمام دفعات پر باری باری غور کرنے پر راضی ہیں اور کسی بھی موقع پر شکوک و شبہات کا سامنا کرنے والے کسانوں کو اپنے شکوک و شبہات کو دور کرنے کے لئے آگے آنا چاہئے۔
مرکزی وزیر نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے یہ بھی واضح کر دیا ہے کہ وزیر زراعت اور حکومت کی جانب سے ڈیڑھ سال سے زرعی اصلاحات کے قوانین کو معطل کرنے کی تجویز میں تاحال کوئی تبدیلی نہیں ہوئی ہے۔

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں نعیم الدین فیضی برکاتی

محمد نعیم الدین فیضی برکاتی ہماری آواز کے اعزازی ایڈیٹر اور سینیئر صحافی ہیں۔ موصوف ایم۔پی۔ کے ضلع کٹنی میں واقع دارالعلوم برکات غریب نواز کے پرنسپل اور ایک اچھے قلم کار ہیں۔ رابطہ نمبر: 09792642810 (ادارہ)

یہ بھی پڑھیں

تحفظ ناموسِ رسالتﷺ کے عنوان پر مالیگاؤں میں پُر امن مظاہرہ آج

آج گستاخ نرسنگھانند کی بدگوئی کے خلاف سنی تنظیمیں گرفتاری دیں گی مالیگاؤں: 12اپریل، ہماری …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے