لال قلعے کے واقعہ کی جانچ ہو: ٹکیت

ہماری آواز/نئی دہلی، 27 جنوری (پریس ریلیز) کسان لیڈر راکیش ٹکیت نے لال قلعہ کمپلکس میں کل لوگوں کے داخلے اور مذہبی جھنڈا لہرائے جانے کے واقعہ کی جانچ کرانے کی مانگ کی ہے۔
مسٹر ٹکیت نے بدھ کو صحافیوں سے بات چیت میں لال قلعہ میں داخل ہونے اور وہاں جھنڈا لہرائے جانے والوں کی شناخت کرنے اور ان کے خلاف کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ ایسا کرنے والے لوگوں کا کن سیاسی پارٹیوں اور افراد سے تعلق تھا اس کی جانچ کرائی جانی چاہئیے۔
انہوں نے کہا کہ جوائنٹ کسان مورچہ نے کسانوں سے لال قلعہ جانے کی اپیل نہیں کی تھ وہ پہلے سے مقررہ راستے پر آگے بڑھ رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ پریڈ کے لئے پہلے سے مقرر کچھ راستوں کا محاصری کیا گیا تھا جس کی بھی جانچ کرائی جانی چاہیے۔
کسان لیڈر نے کہا کہ جس کسی نے بھی پولیس ملازمین پر ٹریکٹر چڑھانے کی کوشش کی ان کی شناخت کی جانی چاہیے اور ان کے خلاف کارروائی کی جانی چاہیے۔ کسان تنظیموں اور پولیس کے درمیان سمجھوتے کے بعد یوم جمہوریہ کے موقع پر راجدھانی میں کسان پریڈ نکالنے پر اتفاق ہوا تھا۔
واضح رہے کہ کل کسان پریڈ کے دوران کافی لوگ ٹریکٹر کے ساتھ لال قلعہ کے احاطے میں داخل ہوگئے تھے اور وہاں ایک مذہبی جھنڈا لہرایا تھا اور توڑ پھوڑ کی تھی. کسان تنظی تین زرعی اصلاحی قوانین کو منسوخ کرنے اور فصلوں کی کم از کم امدادی قیمت کو قانونی درجہ دیئے جانے کی مانگ کے ساتھ 63 دنوں سے راجدھانی کی سرحدوں پر دھرنا مظاہرہ کررہے ہیں۔

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں نعیم الدین فیضی برکاتی

محمد نعیم الدین فیضی برکاتی ہماری آواز کے اعزازی ایڈیٹر اور سینیئر صحافی ہیں۔ موصوف ایم۔پی۔ کے ضلع کٹنی میں واقع دارالعلوم برکات غریب نواز کے پرنسپل اور ایک اچھے قلم کار ہیں۔ رابطہ نمبر: 09792642810 (ادارہ)

یہ بھی پڑھیں

تحفظ ناموسِ رسالتﷺ کے عنوان پر مالیگاؤں میں پُر امن مظاہرہ آج

آج گستاخ نرسنگھانند کی بدگوئی کے خلاف سنی تنظیمیں گرفتاری دیں گی مالیگاؤں: 12اپریل، ہماری …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے