منقبت: زبان اہل دل پر ہے ثناے حافظ ملت

از: محمد نفیس مصباحی بلرام پوری
ساکن ریگاواں، اترولہ ضلع بلرام پور یو پی

زبان اہل دل پر ہے ثناے حافظ ملت
مٹائے مٹ نہیں سکتی ضیاے حافظ ملت

علوم دین کا مرکز بنایا آپ نے جب سے
ہر اہل علم کا دل ہے فداے حافظ ملت

مزین حافظ ملت کا دل ہے نور عرفاں سے
دل اہل خرد میں ہے ولاے حافظ ملت

دیار حافظ ملت نے نطق و روشنی بخشی
زبان و قلب ہیں مدحت سراے حافظ ملت

ہر اک صبح و مسا جاتے ہیں منگتے جھولیاں بھر کر
کبھی بھی کم نہیں ہوتی عطاے حافظ ملت

علوم دین سے جب بھی وفا کی بات آئے گی
ہمیشہ یاد آئے گی وفاے حافظ ملت

فروغ علم میں اس نے بتائی زندگی ساری
میسر ہوگئ جس کو فضاے حافظ ملت

مبارک ہو تمھیں مصباحیو! تم جس جگہ بھی ہو
تمھارے سر پہ رہتی ہے رداے حافظ ملت

نفیس اپنے مقدر پر تو جتنا ناز کر کم ہے
رہا تو بھی تو ہے بن کر گداے حافظ ملت

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانبدارانہ نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

نعت رسول: طائرِ مدینہ تو! لے کے دردِ دل جاتا

مرشدی تاج الشریعہ علیہ الرحمہ کے ایک مصرع پر طبع آزمائی کی کوشش نتیجۂ فکر: …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے