امام رفاعی کی سرکار اقدسﷺ سے بے انتہا محبت اور اس کا انعام

از قلم: شاہ عالم رضوی
نائب پرنسپل: دارالعلوم امام احمد رضا،بندیشرپور سدھارتھ نگریو۔پی۔ انڈیا

بھارت اور عراق یہ دونوں ممالک اولیاے کرام کے مسکن کہے جاتے ہے، جہاں بے شمار اولیاے عظام کے مزارات مقدسہ آج بھی زیارت گاہ خلائق ہیں، جن کے فیضان کرم سے ایک زمانہ مالامال ہورہا ہے اور تا قیام قیامت ان کے فیوض و برکات سے ہمارے قلوب واذہان میں ایمان کی جگمگاہٹ رہے گی۔ ایسی ہی ایک متبرک شخصیت عراق کے شہر ام عبیدہ میں آرام فرما ہے جنھیں سلطان الاولیاء سید احمد کبیر رفاعی علیہ الرحمہ کہا جاتا ہے۔
یہ ایک ایسی ذات ہے جس کے فضائل ومناقب کا بیان ہم جیسے نااہلوں کے بس میں کہاں؟ ان کی عظمت ورفعت کا کیا کہنا جن کی ایک خواہش پر خود نبی پاک صاحب لولاک ﷺ نے مزار پرانوار سے اپنے دست مبارک کو نکال کر بوسہ دینے کا شرف اعزاز بخشا اور یہی نہیں بلکہ قطب الاقطاب غوث الاغیاث سرکار غوث اعظم جیلانی علیہ الرحمہ جیسے سرکردہ اولیاے کرام کی موجودگی میں آپ کو یہ اعزاز ملا۔ اور یہ آپ کی سرکار رسالت مآب ﷺ سے انتہائی درجہ کی محبت کا نتیجہ رہا جو آپ کو یہ اعزاز ملا۔
اللہ رب العزت ہمیں آپ کے فیضان کرم سے تادیر مالامال فرمائے۔آمین

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانبدارانہ نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

سید احمد کبیر رفاعی رحمتہ اللہ علیہ کے لیے الغوث احمد بن خلف البلخی کی اپنے بیٹے کو وصیت

پیش کش: بزم رفاعیخانقاہ رفاعیہ، بڑودہ،گجرات9978344822 شیخ العارفین قدوۃ الاولیاء حضرت محمد بن الغوث احمد …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے