نعت رسول: حضور! آپ کی فرقت رلائے جاتی ہے

نتیجۂ فکر: عبدالمبین حاتمؔ فیضی، مہراج گنج

حضور ! آپ کی فرقت رلائے جاتی ہے
حضور ! وصل کی چاہت ستائے جاتی ہے

حضور ! جب غم ہستی سےمیں بلکتا ہوں
حضور ! آپ کی الفت ہنسائے جاتی ہے

حضور ! اب تو مجھے آپ کی زیارت ہو
حضور ! دید کی حسرت تپائے جاتی ہے

حضور ! آپ کی زلف ِ دوتا کا کیا کہنا
دل و دماغ کو جنت بنائے جاتی ہے

حضور ! اب توکرم کی نظرکریں مجھ پر
غموں کے بحر میں خلقت ڈُبائے جاتی ہے

حضور ! آپ کے چہرے کی وہ چمک! اللہ
شب سیاہ کی ظلمت مٹائے جاتی ہے

حضور ! لوگ بھلا کیا گرائیں حؔاتم کو
اسے تو آپ کی رحمت اٹھائے جاتی ہے

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانبدارانہ نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

نعت رسول: طائرِ مدینہ تو! لے کے دردِ دل جاتا

مرشدی تاج الشریعہ علیہ الرحمہ کے ایک مصرع پر طبع آزمائی کی کوشش نتیجۂ فکر: …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے