مودی حکومت کے پاس ابھی بھی وقت ہے کہ وہ زرعی قوانین کو ختم کرکے "راج دھرم” کی پیروی کرے: سونیا گاندھی

نئی دہلی: 3 جنوری (اے این آئی): دہلی بارڈر پر جاری کسانوں کے احتجاج کے درمیان کانگریس کے عبوری صدر سونیا گاندھی نے اتوار کے روز نریندر مودی حکومت سے زرعی قوانین کو ختم کرتے ہوئے "راج دھرم” کی پابندی کرنے کی اپیل کی۔
"مودی سرکار کے پاس ابھی بھی وقت ہے کہ وہ طاقت کے تکبر کو ترک کردے اور فورا تینوں کالے قوانین کو واپس لے اور سردی اور بارش میں مرنے والے کسانوں کے احتجاج کو ختم کرے۔ یہ راج دھرم ہوگا اور اسی طرح سے ان کسانوں کو سچی خراج تحسین پیش کیا جاسکتا ہے وہ جو انتقال کر گئے ہیں۔ سونیا گاندھی نے ایک بیان میں کہا۔
انہوں نے کہا کہ ملک کے باقی حصوں کی طرح میں "اننداس” کی صورتحال دیکھ کر بھی افسردہ ہوں، جو دہلی کی سرحدوں کے علاقوں میں اپنے مطالبات کے لئے جدوجہد کررہے ہیں۔
کانگریس کے سربراہ کا مزید کہنا تھا کہ "حکومت کی جانب سے کسانوں کے مطالبات تسلیم کرنے میں عدم دلچسپی کی وجہ سے اب تک 50 سے زیادہ کسان اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں”۔

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانبدارانہ نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

بڑھتی ہوئی گستاخیوں کے خلاف تحریک فروغِ اسلام رمضان کی اکیس تاریخ کو ملک گیر سطح پر جیل بھرو مہم کا آغاز کرے گی: قمر غنی عثمانی

پیغمبرِ اسلام ﷺ کی شان میں منصوبہ بند گستاخیوں کے سدِّ باب اور گستاخوں کو …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے