نعت رسول: تُو نبیوں میں اعلیٰ تھا اعلیٰ رہے گا

نتیجۂ فکر: عبدالمبین فیضی، مہراج گنج

عمَل جو "فَحَدِّث” پہ کرتا رہے گا
بَلندی پہ اسکا نصیبہ رہے گا

ہے "تِلْکَ الرُّسُل” میں یہ "فَضَّلْنَا” شاہد
تُو نبیوں میں اعلیٰ تھا اعلیٰ رہے گا

"وَمَایَنْطَقُ” سے ہے واضح یہ بالکل
جُدا میرے آقا کا لِہجَہ رہے گا

ملے گا جسے فیضِ "مَنْ زَار قَبرِی”
تو سر اس کے جنت کا مُژدہ رہے گا

جسے صدقہ مل جاۓ "فَلیَفْرَحُوا” کا
وہ میلادِ سرور مناتا رہے گا

یہی "اَیُّکُمْ مِثْلِی” سے ہم نے جانا
تو یکتا تھا! یکتا ہے! یکتا رہے گا

کرے گا عمَل "اِتَّقُوْا اللّٰه” پر جو
تو قلب و جگر اسکا سُتھرا رہے گا

"رَفَعْنَا” ہے قولِ خدا اس میں شک کیا
”رہے گا یُونہی ان کا چرچہ رہے گا“

یہ "لَوْلَاکْ” سے! بات واضح ہوئی ہے
تو ہی بعدِ رب سب سے اعلیٰ رہے گا

"وَکُونُوا مَعَ الصَّادِقِیں” حکم رب ہے
مزاروں پہ ہر سنی جاتا رہے گا

ہے "لَا تَقْنَطُوا” جب کہ ارشاد مولیٰ
غموں کا ہمیں پھر کیوں خَدشہ رہےگا؟

ہےجب شان! "لَاتَنْھَرْ”ان کی اے فیضی
زباں پر کبھی ان کے! کیوں "لَا” رہے گا

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانبدارانہ نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

نعت رسول: طائرِ مدینہ تو! لے کے دردِ دل جاتا

مرشدی تاج الشریعہ علیہ الرحمہ کے ایک مصرع پر طبع آزمائی کی کوشش نتیجۂ فکر: …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے