کسانوں پر مظالم کھلی نا انصافی ہے: عبدالمعید چودھری

بلگرام/ہردوئی: ہماری آواز، 22دسمبر// زرعی قوانین کالعدم کیے جانے کے مطالبہ کو لے کر کسانوں کی تحریک جاری ہے، وہیں مرکزی حکومت کسی بھی طرح کسانوں کے مطالبات تسلیم کو تیار نہیں ہے یہ باتیں بھارتیہ کسان یونین (بھانو) کے ریاستی سیکریٹری قاری عبدالمعید چودھری نے یہاں جاری ایک بیان میں کہیں۔مسٹر چودھری نے الزام لگاتے ہوئے کہا کسانوں کے مطالبات پر سنجیدگی سے غور کرنے کے بجائے مرکزی حکومت اور اس کے گماشتے اس تحریک کو  ناکام بنانے پر آمادہ ہیں، انہوں نے کہا پولیس کے ذریعے کسانوں پر مظالم اور انہیں ہراساں کرنے کی کوشش ناانصافی پر مبنی ہے ، انہوں نے بتایا کسان تحریک کے دوران اب تک تقریباً 35 کسان جاں بحق ہو چکے ہیں ، اس کے باوجود اب تک کسانوں کے مسائل حل کرنے لیے کوئی قدم نہیں اٹھایا گیا ہے۔ مسٹر چودھری نے فوت ہونے والے کسانوں کو مناسب معاوضہ دیے جانے کا مطالبہ کیا۔

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانبدارانہ نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

رئیس التحریر حضرت علامہ یٰس اختر مصباحی صاحب کا جامعہ احسن البرکات مارہرہ شریف میں طلبۂ جامعہ سے فکری اور آفاقی خطاب

مارہرہ شریف: 26مارچ، ہماری آواز(ضیاءالرحمن امجدی) جامعہ احسن البرکات خانقاہ برکاتیہ بڑی سرکار مارہرہ شریف …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے