نئی تعلیمی پالیسی سب کے لیے یکساں مفید: مرکزی وزیر تعلیم


ہماری آواز دہلی
نئی دہلی ، 11 دسمبر (پریس ریلیز) مرکزی وزیر تعلیم ڈاکٹر رمیش پوکھریال نشنک نے کہا ہے کہ نئی قومی تعلیمی پالیسی ہندوستان کے ہر طبقے ، ہر علاقے ، ہر طالب علموں اور ہر کونے کو یکساں اور جامع تعلیم فراہم کرنے کے مقصد کے ساتھ وجود میں آئی ہے ڈاکٹر نشنک نے آج سی بی ایس ای سہودے اسکول کیمپس کی 26 ویں قومی سالانہ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سنٹرل بورڈ آف سیکنڈری ایجوکیشن نے تعلیم میں عمدہ کارکردگی کے لئے اپنے اسکولوں کے مابین ہم آہنگی کو آسان بنانے کے لئے 1986 میں سہودے کی ابتداء کی۔ اس کی ابتدا ‘کیئرنگ اینڈ شیئرنگ’ کے جذبے سے کیاگیا اور اس کا مقصد سی بی ایس ای کے فیملی اسکولوں کے مابین قریبی رابطے اور تعاون دینا ہ۔
انہوں نے بتایا کہ پورے ملک میں 260 سے زیادہ سہودے کیمپس ایک موثر نیٹ ورک کے ذریعہ اساتذہ اور طلبہ کو بااختیار بنانے میں فعال کردار ادا کررہے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ "سہودے کیمپس ایک ایسا سنگم ہے جہاں اسکول ، اساتذہ برادری کو ایک دوسرے کے ساتھ اپنی مہارت ، تجربہ اور وسائل بانٹنے کے لئے حوصلہ افزائی کی جاتی ہے۔
میں کانفرنس کے اختتام پر تمام سہودے ممبران کو اس سالانہ قومی کانفرنس میں بہترین طریقوں کو بانٹنے اور اسکول کی تعلیم کے معیار کو بہتر بنانے کے عزم کے لئے مبارک باد پیش کرتا ہوں

الدال علیٰ خیر کفاعلہ (شیئر کریں)

ہمارےبارے میں ہماری آواز

ہماری آواز ایک غیر جانبدارانہ نیوز ویب سائٹ ہے جس پر آپ سچی خبروں کے ساتھ ساتھ مذہبی، ملی،قومی، سیاسی، سماجی، ادبی، فکری و اصلاحی مضامین اور شعر وشاعری پڑھ سکتے ہیں۔ یہی نہیں آپ خود بھی ہمیں اپنے پاس پڑوس کی خبریں اور مضامین وغیرہ بھیج سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

پہلی درس گاہ کو معیاری بنائیے

ازقلم: شیبا کوثر (آرہ، بہار) کسی بھی قوم کی تعمیر و ترقی میں درس گاہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے